بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَٰنِ الرَّحِيمِ

تَعْرُجُ الْمَلَائِكَةُ وَالرُّوحُ إِلَيْهِ فِي يَوْمٍ كَانَ مِقْدَارُهُ خَمْسِينَ أَلْفَ سَنَةٍ ﴿4﴾ فَاصْبِرْ صَبْرًا جَمِيلًا ﴿5﴾ إِنَّهُمْ يَرَوْنَهُ بَعِيدًا ﴿6﴾ وَنَرَاهُ قَرِيبًا ﴿7﴾ يَوْمَ تَكُونُ السَّمَاءُ كَالْمُهْلِ ﴿8﴾ وَتَكُونُ الْجِبَالُ كَالْعِهْنِ ﴿9﴾ وَلَا يَسْأَلُ حَمِيمٌ حَمِيمًا ﴿10﴾ يُبَصَّرُونَهُمْ ۚ يَوَدُّ الْمُجْرِمُ لَوْ يَفْتَدِي مِنْ عَذَابِ يَوْمِئِذٍ بِبَنِيهِ ﴿11﴾ وَصَاحِبَتِهِ وَأَخِيهِ ﴿12﴾ وَفَصِيلَتِهِ الَّتِي تُؤْوِيهِ ﴿13﴾ وَمَنْ فِي الْأَرْضِ جَمِيعًا ثُمَّ يُنْجِيهِ ﴿14﴾ كَلَّا ۖ إِنَّهَا لَظَىٰ ﴿15﴾ نَزَّاعَةً لِلشَّوَىٰ ﴿16﴾ تَدْعُو مَنْ أَدْبَرَ وَتَوَلَّىٰ ﴿17﴾ مِنَ اللَّهِ ذِي الْمَعَارِجِ ﴿3﴾ سَأَلَ سَائِلٌ بِعَذَابٍ وَاقِعٍ ﴿1﴾ لِلْكَافِرِينَ لَيْسَ لَهُ دَافِعٌ ﴿2﴾ وَجَمَعَ فَأَوْعَىٰ ﴿18﴾ إِنَّ الْإِنْسَانَ خُلِقَ هَلُوعًا ﴿19﴾ إِذَا مَسَّهُ الشَّرُّ جَزُوعًا ﴿20﴾ وَإِذَا مَسَّهُ الْخَيْرُ مَنُوعًا ﴿21﴾ إِلَّا الْمُصَلِّينَ ﴿22﴾ الَّذِينَ هُمْ عَلَىٰ صَلَاتِهِمْ دَائِمُونَ ﴿23﴾ وَالَّذِينَ فِي أَمْوَالِهِمْ حَقٌّ مَعْلُومٌ ﴿24﴾ لِلسَّائِلِ وَالْمَحْرُومِ ﴿25﴾ وَالَّذِينَ يُصَدِّقُونَ بِيَوْمِ الدِّينِ ﴿26﴾ وَالَّذِينَ هُمْ مِنْ عَذَابِ رَبِّهِمْ مُشْفِقُونَ ﴿27﴾ إِنَّ عَذَابَ رَبِّهِمْ غَيْرُ مَأْمُونٍ ﴿28﴾ وَالَّذِينَ هُمْ لِفُرُوجِهِمْ حَافِظُونَ ﴿29﴾ إِلَّا عَلَىٰ أَزْوَاجِهِمْ أَوْ مَا مَلَكَتْ أَيْمَانُهُمْ فَإِنَّهُمْ غَيْرُ مَلُومِينَ ﴿30﴾ فَمَنِ ابْتَغَىٰ وَرَاءَ ذَٰلِكَ فَأُولَٰئِكَ هُمُ الْعَادُونَ ﴿31﴾ وَالَّذِينَ هُمْ لِأَمَانَاتِهِمْ وَعَهْدِهِمْ رَاعُونَ ﴿32﴾ وَالَّذِينَ هُمْ بِشَهَادَاتِهِمْ قَائِمُونَ ﴿33﴾ وَالَّذِينَ هُمْ عَلَىٰ صَلَاتِهِمْ يُحَافِظُونَ ﴿34﴾ أُولَٰئِكَ فِي جَنَّاتٍ مُكْرَمُونَ ﴿35﴾ فَمَالِ الَّذِينَ كَفَرُوا قِبَلَكَ مُهْطِعِينَ ﴿36﴾ عَنِ الْيَمِينِ وَعَنِ الشِّمَالِ عِزِينَ ﴿37﴾ أَيَطْمَعُ كُلُّ امْرِئٍ مِنْهُمْ أَنْ يُدْخَلَ جَنَّةَ نَعِيمٍ ﴿38﴾ كَلَّا ۖ إِنَّا خَلَقْنَاهُمْ مِمَّا يَعْلَمُونَ ﴿39﴾ فَلَا أُقْسِمُ بِرَبِّ الْمَشَارِقِ وَالْمَغَارِبِ إِنَّا لَقَادِرُونَ ﴿40﴾ عَلَىٰ أَنْ نُبَدِّلَ خَيْرًا مِنْهُمْ وَمَا نَحْنُ بِمَسْبُوقِينَ ﴿41﴾ فَذَرْهُمْ يَخُوضُوا وَيَلْعَبُوا حَتَّىٰ يُلَاقُوا يَوْمَهُمُ الَّذِي يُوعَدُونَ ﴿42﴾ يَوْمَ يَخْرُجُونَ مِنَ الْأَجْدَاثِ سِرَاعًا كَأَنَّهُمْ إِلَىٰ نُصُبٍ يُوفِضُونَ ﴿43﴾ خَاشِعَةً أَبْصَارُهُمْ تَرْهَقُهُمْ ذِلَّةٌ ۚ ذَٰلِكَ الْيَوْمُ الَّذِي كَانُوا يُوعَدُونَ ﴿44﴾

عظیم اور دائمی رحمتوں والے خدا کے نام سے

جس کی طرف فرشتے اور روح الامین بلند ہوتے ہیں اس ایک دن میں جس کی مقدار پچاس ہزار سال کے برابر ہے ﴿4﴾ لہذا آپ بہترین صبر سے کام لیں ﴿5﴾ یہ لوگ اسے دور سمجھ رہے ہیں ﴿6﴾ اور ہم اسے قریب ہی دیکھ رہے ہیں ﴿7﴾ جس دن آسمان پگھلے ہوئے تانبے کے مانند ہو جائے گا ﴿8﴾ اور پہاڑ دھنکے ہوئے اون جیسے ﴿9﴾ اور کوئی ہمدرد کسی ہمدرد کا پرسانِ حال نہ ہو گا ﴿10﴾ وہ سب ایک دوسرے کو دکھائے جائیں گے تو مجرم چاہے گا کہ کاش آج کے دن کے عذاب کے بدلے اس کی اولاد کو لے لیا جائے ﴿11﴾ اور بیوی اور بھائی کو ﴿12﴾ اور اس کنبہ کو جس میں وہ رہتا تھا ﴿13﴾ اور روئے زمین کی ساری مخلوقات کو اور اسے نجات دے دی جائے ﴿14﴾ ہرگز نہیں یہ آتش جہنمّ ہے ﴿15﴾ کھال اتار دینے والی ﴿16﴾ ان سب کو آواز دے رہی ہے جو منہ پھیر کر جانے والے تھے ﴿17﴾ یہ بلندیوں والے خدا کی طرف سے ہے ﴿3﴾ ایک مانگنے والے نے واقع ہونے والے عذاب کا سوال کیا ﴿1﴾ جس کا کافروں کے حق میں کوئی دفع کرنے والا نہیں ہے ﴿2﴾ اور جنہوں نے مال جمع کر کے بند کر رکھا تھا ﴿18﴾ بیشک انسان بڑا لالچی ہے ﴿19﴾ جب تکلیف پہنچ جاتی ہے تو فریادی بن جاتا ہے ﴿20﴾ اور جب مال مل جاتا ہے تو بخیل ہو جاتا ہے ﴿21﴾ علاوہ ان نمازیوں کے ﴿22﴾ جو اپنی نمازوں کی پابندی کرنے والے ہیں ﴿23﴾ اور جن کے اموال میں ایک مقررہ حق معین ہے ﴿24﴾ مانگنے والے کے لئے اور نہ مانگنے والے کے لئے ﴿25﴾ اور جو لوگ روز قیامت کی تصدیق کرنے والے ہیں ﴿26﴾ اور جو اپنے پروردگار کے عذاب سے ڈرنے والے ہیں ﴿27﴾ بیشک عذاب پروردگار بے خوف رہنے والی چیز نہیں ہے ﴿28﴾ اور جو اپنی شرمگاہوں کی حفاظت کرنے والے ہیں ﴿29﴾ علاوہ اپنی بیویوں اور کنیزوں کے کہ اس پر ملامت نہیں کی جاتی ہے ﴿30﴾ پھر جو اس کے علاوہ کا خواہشمند ہو وہ حد سے گزر جانے والا ہے ﴿31﴾ اور جو اپنی امانتوں اور عہد کا خیال رکھنے والے ہیں ﴿32﴾ اور جو اپنی گواہیوں پر قائم رہنے والے ہیں ﴿33﴾ اور جو اپنی نمازوں کا خیال رکھنے والے ہیں ﴿34﴾ یہی لوگ جنّت میں با عزت طریقہ سے رہنے والے ہیں ﴿35﴾ پھر ان کافروں کو کیا ہو گیا ہے کہ آپ کی طرف بھاگے چلے آ رہے ہیں ﴿36﴾ دائیں بائیں سے گروہ در گروہ ﴿37﴾ کیا ان میں سے ہر ایک کی طمع یہ ہے کہ اسے جنت النعیم میں داخل کر دیا جائے ﴿38﴾ ہرگز نہیں انہیں تو معلوم ہے کہ ہم نے انہیں کس چیز سے پیدا کیا ہے ﴿39﴾ میں تمام مشرق و مغرب کے پروردگار کی قسم کھا کر کہتا ہوں کہ ہم قدرت رکھنے والے ہیں ﴿40﴾ اس بات پر کہ ان کے بدلے ان سے بہتر افراد لے آئیں اور ہم عاجز نہیں ہیں ﴿41﴾ لہذا انہیں چھوڑ دیجئے یہ اپنے باطل میں ڈوبے رہیں اور کھیل تماشہ کرتے رہیں یہاں تک کہ اس دن سے ملاقات کریں جس کا وعدہ کیا گیا ہے ﴿42﴾ جس دن یہ سب قبروں سے تیزی کے ساتھ نکلیں گے جس طرح کسی پرچم کی طرف بھاگے جا رہے ہوں ﴿43﴾ ان کی نگاہیں جھکی ہوں گی اور ذلت ان پر چھائی ہو گی اور یہی وہ دن ہو گا جس کا ان سے وعدہ کیا گیا ہے ﴿44﴾