بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَٰنِ الرَّحِيمِ

لَقَدْ خَلَقْنَا الْإِنْسَانَ فِي كَبَدٍ ﴿4﴾ أَيَحْسَبُ أَنْ لَنْ يَقْدِرَ عَلَيْهِ أَحَدٌ ﴿5﴾ يَقُولُ أَهْلَكْتُ مَالًا لُبَدًا ﴿6﴾ أَيَحْسَبُ أَنْ لَمْ يَرَهُ أَحَدٌ ﴿7﴾ أَلَمْ نَجْعَلْ لَهُ عَيْنَيْنِ ﴿8﴾ وَلِسَانًا وَشَفَتَيْنِ ﴿9﴾ وَهَدَيْنَاهُ النَّجْدَيْنِ ﴿10﴾ فَلَا اقْتَحَمَ الْعَقَبَةَ ﴿11﴾ وَمَا أَدْرَاكَ مَا الْعَقَبَةُ ﴿12﴾ فَكُّ رَقَبَةٍ ﴿13﴾ أَوْ إِطْعَامٌ فِي يَوْمٍ ذِي مَسْغَبَةٍ ﴿14﴾ يَتِيمًا ذَا مَقْرَبَةٍ ﴿15﴾ أَوْ مِسْكِينًا ذَا مَتْرَبَةٍ ﴿16﴾ وَأَنْتَ حِلٌّ بِهَٰذَا الْبَلَدِ ﴿2﴾ وَوَالِدٍ وَمَا وَلَدَ ﴿3﴾ لَا أُقْسِمُ بِهَٰذَا الْبَلَدِ ﴿1﴾ ثُمَّ كَانَ مِنَ الَّذِينَ آمَنُوا وَتَوَاصَوْا بِالصَّبْرِ وَتَوَاصَوْا بِالْمَرْحَمَةِ ﴿17﴾ أُولَٰئِكَ أَصْحَابُ الْمَيْمَنَةِ ﴿18﴾ وَالَّذِينَ كَفَرُوا بِآيَاتِنَا هُمْ أَصْحَابُ الْمَشْأَمَةِ ﴿19﴾ عَلَيْهِمْ نَارٌ مُؤْصَدَةٌ ﴿20﴾

عظیم اور دائمی رحمتوں والے خدا کے نام سے

ہم نے انسان کو مشقت میں رہنے والا بنایا ہے ﴿4﴾ کیا اس کا خیال یہ ہے کہ اس پر کوئی قابو نہ پا سکے گا ﴿5﴾ کہ وہ کہتا ہے کہ میں نے بے تحاشہ صرف کیا ہے ﴿6﴾ کیا اس کا خیال ہے کہ اس کو کسی نے نہیں دیکھا ہے ﴿7﴾ کیا ہم نے اس کے لئے دو آنکھیں نہیں قرار دی ہیں ﴿8﴾ اور زبان اور دو ہونٹ بھی ﴿9﴾ اور ہم نے اسے دونوں راستوں کی ہدایت دی ہے ﴿10﴾ پھر وہ گھاٹی پر سے کیوں نہیں گزرا ﴿11﴾ اور تم کیا جانو یہ گھاٹی کیا ہے ﴿12﴾ کسی گردن کا آزاد کرانا ﴿13﴾ یا بھوک کے دن میں کھانا کھلانا ﴿14﴾ کسی قرابتدار یتیم کو ﴿15﴾ یا خاکسار مسکین کو ﴿16﴾ اور تم اسی شہر میں تو رہتے ہو ﴿2﴾ اور تمہارے باپ آدم علیہ السّلام اور ان کی اولاد کی قسم ﴿3﴾ میں اس شہر کی قسم کھاتا ہوں ﴿1﴾ پھر وہ ان لوگوں میں شامل ہو جاتا جو ایمان لائے اور انہوں نے صبر اور مرحمت کی ایک دوسرے کو نصیحت کی ﴿17﴾ یہی لوگ خو ش نصیبی والے ہیں ﴿18﴾ اور جن لوگوں نے ہماری آیات سے انکار کیا ہے وہ بد بختی والے ہیں ﴿19﴾ انہیں آگ میں ڈال کر اسے ہر طرف سے بند کر دیا جائے گا ﴿20﴾