بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَٰنِ الرَّحِيمِ

وَالتِّينِ وَالزَّيْتُونِ ﴿1﴾ وَطُورِ سِينِينَ ﴿2﴾ وَهَٰذَا الْبَلَدِ الْأَمِينِ ﴿3﴾ لَقَدْ خَلَقْنَا الْإِنْسَانَ فِي أَحْسَنِ تَقْوِيمٍ ﴿4﴾ ثُمَّ رَدَدْنَاهُ أَسْفَلَ سَافِلِينَ ﴿5﴾ إِلَّا الَّذِينَ آمَنُوا وَعَمِلُوا الصَّالِحَاتِ فَلَهُمْ أَجْرٌ غَيْرُ مَمْنُونٍ ﴿6﴾ فَمَا يُكَذِّبُكَ بَعْدُ بِالدِّينِ ﴿7﴾ أَلَيْسَ اللَّهُ بِأَحْكَمِ الْحَاكِمِينَ ﴿8﴾

عظیم اور دائمی رحمتوں والے خدا کے نام سے

قسم ہے انجیر اور زیتون کی ﴿1﴾ اور طور سینین کی ﴿2﴾ اور اس امن والے شہر کی ﴿3﴾ ہم نے انسان کو بہترین ساخت میں پیدا کیا ہے ﴿4﴾ پھر ہم نے اس کو پست ترین حالت کی طرف پلٹا دیا ہے ﴿5﴾ علاوہ ان لوگوں کے جو ایمان لائے اور انہوں نے نیک اعمال انجام دیئے تو ان کے لئے نہ ختم ہونے والا اجر ہے ﴿6﴾ پھر تم کو روز جزا کے بارے میں کون جھٹلا سکتا ہے ﴿7﴾ کیا خدا سب سے بڑا حاکم اور فیصلہ کرنے والا نہیں ہے ﴿8﴾