بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَٰنِ الرَّحِيمِ

إِذَا زُلْزِلَتِ الْأَرْضُ زِلْزَالَهَا ﴿1﴾ وَأَخْرَجَتِ الْأَرْضُ أَثْقَالَهَا ﴿2﴾ وَقَالَ الْإِنْسَانُ مَا لَهَا ﴿3﴾ يَوْمَئِذٍ تُحَدِّثُ أَخْبَارَهَا ﴿4﴾ بِأَنَّ رَبَّكَ أَوْحَىٰ لَهَا ﴿5﴾ يَوْمَئِذٍ يَصْدُرُ النَّاسُ أَشْتَاتًا لِيُرَوْا أَعْمَالَهُمْ ﴿6﴾ فَمَنْ يَعْمَلْ مِثْقَالَ ذَرَّةٍ خَيْرًا يَرَهُ ﴿7﴾ وَمَنْ يَعْمَلْ مِثْقَالَ ذَرَّةٍ شَرًّا يَرَهُ ﴿8﴾

عظیم اور دائمی رحمتوں والے خدا کے نام سے

جب زمین زوروں کے ساتھ زلزلہ میں آ جائے گی ﴿1﴾ اور وہ سارے خزانے نکال ڈالے گی ﴿2﴾ اور انسان کہے گا کہ اسے کیا ہو گیا ہے ﴿3﴾ اس دن وہ اپنی خبریں بیان کرے گی ﴿4﴾ کہ تمہارے پروردگار نے اسے اشارہ کیا ہے ﴿5﴾ اس روز سارے انسان گروہ در گروہ قبروں سے نکلیں گے تاکہ اپنے اعمال کو دیکھ سکیں ﴿6﴾ پھر جس شخص نے ذرہ برابر نیکی کی ہے وہ اسے دیکھے گا ﴿7﴾ اور جس نے ذرہ برابر برائی کی ہے وہ اسے دیکھے گا ﴿8﴾