تعقیب نماز صبح

منقول از مصباح متہجد: اے معبود! محمد (ص) و آل محمد (ع) پر رحمت نازل فرما اور حق میں اختلاف کے مقام پر اپنے حکم سے مجھے ہدایت دے، بے شک تو جسے چاہے سیدھی راہ کی ہدایت فرماتا ہے ۔ اس کے بعد دس مرتبہ کہیں: اے معبود! محمد (ص) و آل محمد (ع) پر رحمت فرما جو اوصیائ ہیں کہ جو خدا سے راضی اور خدا ان سے راضی ہے، ان کے لیے اپنی بہترین رحمتیں اور اپنی بہترین برکتیں قرار دے، ان پر اور ان کی ارواح واجسام پر سلام ہو اور اﷲ کی رحمت وبرکت نازل ہو ۔ اس درود و سلام کی جمعہ کے عصر میں پڑھنے کی بڑی فضیلت بیان ہوئی ہے، اسکے بعد کہیں: اے معبود! مجھے اس راہ پر زندہ رکھ جس پر تو نے علی ابن ابی طالب (ع) کو زندہ رکھا اور مجھے اسی راہ پر موت دے جس پر تو نے امیر المومنین علی بن ابی طالب (ع) کو شہادت عطا فرمائی ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: میں اﷲ سے بخشش چاہتا ہوں اور اسکے حضور توبہ کرتا ہوں ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: خدا سے صحت وعافیت مانگتا ہوں ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: میں آتش جہنم سے خدا کی پناہ چاہتا ہوں ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: اس سے جنت کا طالب ہوں ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: میں اﷲ سے حور عین کا طالب ہوں ۔ پھر سو مرتبہ کہیں: اﷲ کے سوائ کوئی معبود نہیں جو بادشاہ اور روشن حق ہے ۔ سو مرتبہ سورہ اخلاص پڑھیں اور پھر سو مرتبہ کہیں: محمد (ص) و آل محمد (ع) پر خدا کی رحمت ہو ۔ سو مرتبہ کہیں: اﷲ پاک ہے اور اسی کیلئے حمد ہے اور اﷲ کے سوا کوئی معبود نہیں اور اﷲ برتر ہے نہیں کوئی طاقت و قوت مگر وہ جو اﷲ بزرگ وبرتر سے ملتی ہے ۔ سو مرتبہ کہیں: جو خدا چاہے وہی ہوتا ہے اور اﷲ بزرگ و برتر سے بڑھ کر کوئی طاقت وقوت نہیں ہے ۔ پھر کہیں: اے معبود میں نے تیری عظیم نگہبانی میں صبح کی ہے جس تک کسی کا ہاتھ نہیں پہنچتا، نہ کوئی نیرنگ بار شب میں اس پر یورش کر پاتا ہے اس مخلوق میں سے جو تو نے خلق فرمائی ہے اور نہ وہ مخلوق جسے تو نے زبان دی اور جسے زبان نہیں دی، ہر خوف میں تیری پناہ میں تیرے نبی (ص) کے اہلبیت (ع) کی ولا سے ساختہ لباس میں ملبوس ہر چیز سے محفوظ جو میرے اخلاص کی مضبوط دیوار میں رخنا ڈالنا چاہے، یہ مانتے ہوئے کہ وہ حق ہیں، ان کی رسی سے وابستگی ہے اس یقین سے کہ حق ان کیلئے ان کے ساتھ اور ان میں ہے، جو ان کو چاہے میں اسے چاہتا ہوں جو ان سے دور ہو میں اس سے دور ہوں، پس اے خدا ان کے طفیل مجھے ہر اس شر سے پناہ دے جسکا مجھے خوف ہے، اے بلند ذات زمین وآسمان کی پیدائش کے واسطے سے دشمنوں کو مجھ سے دور کر دے، بے شک ہم نے ایک دیوار ان کے سامنے اور ایک دیوار ان کے پیچھے بنا دی پس ان کو ڈھانپ دیا کہ وہ دیکھتے نہیں ہیں ۔ یہ امیرالمومنین (ع) کی دعائے لیلۃ المبیت ہے اور ہر صبح وشام پڑھی جاتی ہے، اور تہذیب میں روایت ہے کہ جو شخص نمازِ صبح کے بعد درج ذیل دعا دس مرتبہ پڑھے تو حق تعالیٰ اسکو اندھے پن، دیوانگی، کوڑھ، تہی دستی، چھت تلے دبنے، اور بڑھاپے میں حواس کھو بیٹھنے سے محفوظ فرماتا ہے: پاک ہے خدائے برتر اور تعریف سب اسی کی ہے اور نہیں کوئی حرکت وقوت مگر وہ جو خدائے بلند وبرتر سے ملتی ہے ۔ نیز شیخ کلینی (رح) نے حضرت امام جعفر صادق (ع) سے روایت کی ہے کہ جو نماز صبح اور نماز مغرب کے بعد سات مرتبہ درج ذیل دعا پڑھے تو حق تعالیٰ اس سے ستر قسم کی بلائیں دور کر دیتا ہے ﴿ان میں سب سے معمولی زہرباد، پھلبھری اور دیوانگی ہے﴾، اور اگر وہ شقی ہے تو اسے اس زمرے سے نکال کر سعید ونیک بخت لوگوں میں داخل کر دیا جائے گا: اﷲ کے نام سے ﴿شروع کرتا ہوں﴾ جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے نہیں کوئی حرکت وقوت مگر خدائے بزرگ وبرتر سے ملتی ہے۔ نیز آنحضرت (ص) سے روایت ہے کہ دنیا وآخرت کی کامیابی اور دردِ چشم کے خاتمے کیلئے صبح اور مغرب کی نماز کے بعد یہ دعا پڑھیں: خداوندا! محمد (ص) و آل محمد (ع) کا جو تجھ پر حق ہے میں اس کے واسطے سے سوال کرتا ہوں کہ محمد (ص) و آل محمد (ع) پر اپنی رحمت نازل فرما کہ میری آنکھوں میں نور، میرے دین میں بصیرت، میرے دل میں یقین، میرے عمل میں اخلاص، میرے نفس میں سلامتی، اور میرے رزق میں کشادگی عطا فرما، اور جب تک زندہ رہوں مجھے اپنے شکر کی توفیق دیتا رہ ۔ شیخ ابن فہد نے عدۃالداعی میں امام رضا (ع) سے نقل کیا ہے کہ جو شخص نماز صبح کے بعد یہ دعا پڑھے تو وہ جو بھی حاجت طلب کرے گا خدا پوری فرمائے گا اور اسکی ہر مشکل آسان کردے گا: اﷲ کے نام سے شروع کرتا ہوں ۔ خدا رحمت فرمائے محمد (ص) و آل محمد (ع) پر، اور میں اپنا معاملہ سپرد خدا کرتا ہوں بے شک خدا بندوں کو دیکھتا ہے پس خدا اس شخص کو ان برائیوں سے بچائے جو لوگوں نے پیدا کیں۔ اور تیرے سوا کوئی معبود نہیں، پاک ہے تیری ذات بیشک میں ظالموں میں سے تھا تو ہم ﴿خدا﴾ نے اس کی دعا قبول کی اور اسے غم سے نجات دی اور ہم مومنوں کو اسی طرح نجات دیتے ہیں، ہمارے لیے خدا کافی ہے اور بہترین سرپرست ہے، پس ﴿مجاہد﴾ خدا کے فضل وکرم سے اسطرح آئے کہ انہیں تکلیف نہ پہنچی تھی جو اﷲ چاہے وہ ہو گا، نہیں کوئی طاقت وقوت مگر وہ جو اﷲ سے ملتی ہے، جو اﷲ چاہے وہ ہوگا نہ وہ جو لوگ چاہیں، اور جو اﷲ چاہے وہ ہوگا اگرچہ لوگوں پر گراں ہو، میرے لئے پلنے والوں کے بجائے پالنے والا کافی ہے، میرے لئے خلق ہونے والوں کی بجائے خلق کرنے والا کافی ہے، میرے لیے رزق پانے والوں کی بجائے رزق دینے والا کافی ہے، جہانوں کا پالنے والا اﷲ میرے لیے کافی ہے ، وہ جو میرے لیے کافی ہے وہی میرے لیے کافی ہے، وہ جو ہمیشہ سے کافی ہے میرے لیے کافی ہے، وہ جو کافی ہے میں جب سے ہوں اور کافی رہے گا، میرے لیے کافی ہے وہ اﷲ جسکے سوا کوئی معبود نہیں میں اسی پر توکل کرتا ہوں اور وہی عرش عظیم کا مالک ہے۔